معروف اداکار نعمان اعجاز نے ڈرامہ انڈسٹری میں واجبات کی ادائیگی سے متعلق انکشافات کردیئے۔

0

معروف اداکار نعمان اعجاز نے ڈرامہ انڈسٹری میں واجبات کی ادائیگی سے متعلق انکشافات کردیئے۔

رافع راشدی کے ساتھ ایک انٹرویو میں نعمان اعجاز کا کہنا تھا کہ بشمول ان کے کئی اداکاروں کو سالوں بعد بھی ان کے واجبات کی ادائیگی نہیں کی گئی ہے، ان کا کہنا تھا کہ ایک چینل نے ابھی تک مجھے 4 ،5 کروڑ دینے ہیں اور 2 ڈھائی کروڑ ایک چینل نے دینا ہے۔

نعمان اعجاز کا کہنا تھا کہ پورا نظام ہی کرپٹ ہے پاکستان میں کوئی ایک ایسا اداکار یا پروڈیوسر نہیں جس کا معاوضہ نہ پھنسا ہو ۔

View this post on Instagram

A post shared by All Pakistan Drama Page (@allpakdramapageofficial)

انہوں نے کہا کہ مجھے معاف کیجئے گا لیکن آج کل اداکارگدھوں کی طرح کام کرتے ہیں، لاک ڈاؤن کے دوران اداکاروں سے زبردستی کام کروایا گیا اور کہا گیا کہ اگر آپ کام نہیں کرتے تو یاد رکھیں آپ کا مستقبل تاریک ہے، آپ کا مستقبل ختم ہوجائے گا۔،

انہوں نے مزید کہا کہ بہت سارے اداکاروں کرونا مثبت آنے کے باوجود سب سے چھپانا پڑا کیونکہ انہیں کام کھونے کے خوف تھا ۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستانی ڈرامہ انڈسٹری میں رائلٹی کا کوئی تصور نہیں ہے، مجھے ڈرامہ نجات کے لئے صرف ایک بار رائلٹی دی گئی تھی جو میں نے 90 کی دہائی میں پی ٹی وی کے لئے کیا تھا۔

اداکار کا کہنا تھا کہ پاکستان میں یہ سب کیا ہورہا ہے ،کون سی اخلاقیات ، کون سا پروفیشنلزم، کون سا کنٹریکٹ ،کون سا قانون، یہ سب بکواس ہے، کوئی قانون ان کو تحفظ نہیں دیتاحتیٰ کہ آپ کا ساتھی پروڈیوسر آپ کے لیے آواز نہیں اٹھاتا ۔

LEAVE A REPLY