ایف بی آر نے ریئل اسٹیٹ ایجنٹس پر بڑی شرط عائد کردی

0


اسلام آباد : فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر ) نے ریئل سٹیٹ ایجنٹس کی رجسٹریشن لازمی قرار دے دی، جس کے بعد غیر رجسٹرڈ ایجنٹ سے کوئی سرکاری یا نجی ڈیویلپمنٹ اتھارٹی بزنس نہیں کرسکے گی۔

تفصیلات کے مطابق رئیل اسٹیٹ ایجنٹس کیلئے ایف بی آر سے رجسٹریشن لازمی قرار دے دیا ، جس کے بعد کوئی سرکاری یا نجی ڈیویلپمنٹ اتھارٹی غیر رجسٹرڈ ایجنٹ سے بزنس نہیں کرسکے گی۔

اس حوالے سے ایف بی آر نے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا ہے ، جس میں کہا گیا ہے کہ غیرمنقولہ پراپرٹی کی ٹرانسفر یا رجسٹریشن بھی نہیں ہوسکےگی اور خلاف ورزی پرمنی لانڈرنگ اور ٹیررفنانسنگ کے قوانین کے تحت کارروائی ہوگی۔

ایف بی آر نے تمام ہاؤسنگ اتھارٹیز اور کارپوریٹ ہاوٴسنگ سوسائٹیز پر شرط لاگو کردی ہے ، رہائشی یا کمرشل مقاصد کیلئے ڈیویلپمنٹ اسکیموں پر بھی اس کا اطلاق ہوگا۔

نوٹیفکیشن میں تعمیرات اور پراپرٹی کی خرید و فروخت یا ملکیتی حقوق کی منتقلی بھی مشروط قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ رئیل اسٹیٹ ایجنٹس کورجسٹریشن سرٹیفکیٹ حاصل کرنا ہوگا۔

ایف بی آر کا کہنا تھا کہ رئیل اسٹیٹ ایجنٹس کونان فنانشل بزنس اینڈپروفیشن کے طور پر رجسٹرکرانا ہوگا۔

LEAVE A REPLY