ووٹوں کی خرید و فروخت میں سب سے زیادہ مال کس نے بنایا؟ وزیراعظم نے بتادیا

0


کلرسیداں: وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ اپوزیشن جماعتیں سینیٹ الیکشن کےکرپٹ نظام کی سپورٹ کررہی ہیں ، سینیٹ کی ایک سیٹ کا ریٹ50 سے 70کروڑ روپے لگ چکا ہے، ووٹوں کی خریدوفروخت میں سب سےزیادہ مال مولانا فضل الرحمان نےبنایا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ پہلے ویڈیوہوتی تو میں اپنے خلاف مقدمات میں عدالت کو پیش کرتا، سوال یہ نہیں ہونا چاہیے کہ ویڈیو کی ٹائمنگ کیاہے ، یاد رکھیں اوپن بیلٹنگ نہ ہوئی تواپوزیشن والےروئیں گے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ سیکریٹ ووٹنگ پرحکومت کو اپوزیشن سے زیادہ سیٹیں مل سکتی ہیں، سینیٹ کی ایک سیٹ کا ریٹ50 سے 70کروڑ روپے لگ چکا ہے، کیسے ممکن ہے پیسہ لگا کر سینیٹر بننے والا پیسہ نہیں بنائے گا۔

عمران خان نے کہا کہ لوچستان میں سینیٹ کے1ووٹ کی قیمت50سے 70کروڑ لگ رہی ہے ، آج نہیں کئی دفعہ پہلےبھی مجھے پیسوں کے عوض سیٹ بیچنے کی آفر ہوئی، ڈائریکٹ اور ان ڈائریکٹ سینیٹ سیٹ بیچنے کیلئےرابطے کیے گئے۔

اپوزیشن کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ن لیگ،پی پی چارٹر آف ڈیمو کریسی میں اوپن بیلٹ کامعاہدہ کرچکی ہیں، میں مسلم لیگ ن کے اوپن بیلٹ کے مطالبےکی تائید کر چکا ہوں ، اصل ایشو یہ ہے کیا موجودہ سسٹم کےتحت الیکشن ہونا چاہیے یا نہیں۔

وزیراعظم نے مزید بتایا کہ ووٹوں کی خریدوفروخت میں سب سےزیادہ مال مولانا فضل الرحمان نےبنایا، اہم بات یہ ہے ویڈیو سے میرے مؤقف کی تائیدہوئی، اپوزیشن جماعتیں سینیٹ الیکشن کےکرپٹ نظام کی سپورٹ کررہی ہیں اور مولانافضل الرحمان اس نظام کے سب سے بڑے بینفشری ہیں۔

معاشی صورتحال کے حوالے سے عمران خان کا کہنا تھا کہ غلط وقت پر2بارشیں ہوئیں جس سےگندم کی پیداوار کم ہوئی، آٹےکی قیمت نہ بڑھی اس لئےگندم درآمدکررہےہیں، ڈالر کا ریٹ بڑھنے سے ہر چیز مہنگی ہوئی، ہماری ساری کوشش ہے کہ اپنی برآمدات بڑھائیں۔

وزیراعظم نے کرکٹ ٹیم کو کامیابی پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کرکٹ کا بنیادی ڈھانچہ درست ہو چکا ہے، سسٹم تبدیل ہونے کے نتائج آئندہ 3،2سالوں میں آئیں گے۔

LEAVE A REPLY