من مانی قیمتوں پر فروخت ہونے والا “ٹماٹر” فری میں تقسیم ہونے لگا

0


حیدرآباد: ملک میں خاص تہواروں کے موقع پر زائد قیمتوں پر فروخت ہونے والا ٹماٹر آج کل بے قدری کا شکار ہے، جس کا نتیجہ یہ نکلا ہے کہ اسے مفت تقسیم کیا جانے لگا ہے۔

ٹماٹر وہ سبزی ہے جو تقریبا تمام ہی سالن اور پکوانوں میں عمومی طور پر استعمال کی جاتی ہے، سندھ سمیت پاکستان بھر میں خاص تہواروں کے دوران اس کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ہوجاتا ہے اور سبزی فروش ڈیمانڈ زیادہ ہونے کا عذر پیش کرتے ہوئے اسے من مانی نرخوں میں فروخت کرتے ہیں، ان تہواروں کے دوران ٹماٹر کی فی کلو قیمت 400 روپے تک پہنچ جاتی ہے۔

مگر آج کل ٹماٹر مفت میں تقسیم کیا جارہا ہے اور یہ منظر حیدرآباد کے علاقے نوکوٹ میں دیکھنے کو ملا،جہاں سبزی منڈی مالکان نے دس کلو ٹماٹر کے تھیلے عوام میں مفت تقسیم کئے۔


ٹماٹر کی فصل کاشت کرنے والے کاشتکاروں کا موقف ہے کہ اس بار زیادہ فصل ہونے کے باعث ٹماٹر کو مارکیٹ تک لانے میں نقصان ہورہا ہے، کیونکہ ٹرانسپورٹ اخراجات زیادہ ہوچکے جبکہ فصل کی قیمتیں کم ہونے کے باعث وہ یہ نقصان برداشت نہیں کرسکتے۔

رپورٹ کے مطابق اس وقت سندھ کی مختلف سڑکوں پر کاشتکارخود ٹماٹر اور سبزیاں فروخت کرنے لگے ہیں۔

واضح رہے کہ اس وقت سندھ کے اضلاع بدین، حیدرآباد میں ٹماٹر کی وافر فصل پیدا ہوئی ہے، جس کا نتیجہ یہ نکلا ہے کہ سبزی مارکیٹوں میں ٹماٹر بیس روپے کلو میں باآسانی دستیاب ہے۔

LEAVE A REPLY