سندھ میں لاک ڈاؤن کا فیصلہ ، تعلیمی ادارے بند ہوں گے یا نہیں؟ والدین کیلئے اہم خبر آگئی

0


کراچی : وزیرتعلیم سعید غنی نے واضح کیا ہے کہ تعلیمی ادارے اسمارٹ لاک ڈاؤن کےدوران بند نہیں کر یں گے تاہم جس تعلیمی ادارے میں ایک بھی کورونا کیسز نکلے گا اسے سیل کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیرتعلیم سندھ سعید غنی نے سندھ میں اسمارٹ لان ڈاؤن کے حوالے سے اے آر وائی نیوز سے فون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ تعلیمی ادارے اسمارٹ لاک ڈاؤن کےدوران بند نہیں کر یں گے۔

سعید غنی کا کہنا تھا کہ تعلیمی اداروں میں کوروناکیسزنکلنےکےبعد ایکشن لیا گیا، کورونا کی دوسری لہرمیں 141اسکولز اور4 کالجز کو بند کیا۔

وزیرتعلیم سندھ نے مزید کہا تعلیمی اداروں کو ایک بارپھر ایس او پیزپرسختی سے عمل کی ہدایت کریں گے ، جس تعلیمی ادارے میں ایک بھی کورونا کیس نکلے گا اسے سیل کیا جائے گا، فی الحال کسی بھی تعلیمی ادارے کو بند کرنے کا فیصلہ نہیں کیا گیا۔

یاد رہے سندھ حکومت نے بھی ملک میں کورونا کی شدت میں اضافے کے پیش نظر 15اپریل تک اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ کرتے ہوئے نوٹی فیکشن جاری کردیا ہے۔

نوٹی فکیشن میں کہا گیا ہے کہ اسمارٹ لاک ڈاؤن میں شادی ہالزمیں کھانا کھلانے پر پابندی ہوگی تاہم شادی کی دعوت میں 300 افراد بلائے جاسکیں گے۔

نوٹیفکیشن میں بتایا گیا کہ تمام کاروباری مراکز رات 10 بجے بند کرناہوں گے ، تمام کاروباری مراکز صبح 6 بجے سے رات 10 بجے بند تک کھولے جاسکتے ہیں۔

جاری نوٹی فیکشن کے مطابق ہوٹل،ہالز میں ڈائننگ پرپابندی کے ساتھ ساتھ سرکاری و نجی دفاتر میں 50فیصد اسٹاف بلانے کی اجازت ہوگی جبکہ میڈیکل اسٹورز ، کلینک ، اسپتال،بیکری، پیٹرول پمپس کو استثنیٰ ہوگا۔

LEAVE A REPLY